بـــيانــات هـــامّـة وعــــاجــلة

العربية  فارسى  اردو  English  Français  Español  Türk  Deutsh  Italiano  русский  Melayu  Kurdî  Kiswahili

The Awaited Mahdi is calling to the global peace among the human populations

The fact of Planet-X, the planet of chastisement from the decisive Book as a reminder to the possessors of understanding-minds

A brief word about The Insolent (Antichrist) the Liar Messiah

Donald Trump is an enemy to the original American people, and an enemy to all Muslim and Christian people and their Governments, and an enemy to human populations altogether except the human satans the extremest ones in satan’s party

عــــاجل: تحذيرٌ ونذيرٌ لكافة البشر

تذكيـرٌ من محكم الذّكر لصُنّاع القرار من المسلمين

الإمام المهديّ يعلن غرّة الصيام الشرعيّة لعامكم هذا 1439 بناء على ثبوت هلال رمضان شرعاً

الإمام المهديّ ناصر محمد اليماني يحذّر الذين يخالفون أمر الله ورسوله من غضب الله ومقته وعذابه

سوف تدرك الشمس القمر أكبر وأكبر في هلال رمضان لعامكم هذا 1439 تصديق شرطٍ من أشراط الساعة الكُبر وآية التصديق للمهديّ المنتظَر ناصر محمد اليماني

إعلان مفاجأةٌ كبرى إلى كافة البشر لمن شاء منهم أن يتقدّم أو يتأخّر، والأمر لله الواحد القهار

النتائج 1 إلى 2 من 2

الموضوع: Imam mahdi muntazir aqeedah-e- shafaa se inkar krte hain jo allah swt kay ilawa aik bande kay hath se doosre bande ko di jaye

  1. ترتيب المشاركة ورابطها: #1  Print  mPDF  PDF    رقم المشاركة لاعتمادها في الاقتباس: 279663   تعيين كل النص
    وقار علي غير متواجد حالياً من الأنصار السابقين الأخيار
    تاريخ التسجيل
    Mar 2016
    المشاركات
    4

    افتراضي Imam mahdi muntazir aqeedah-e- shafaa se inkar krte hain jo allah swt kay ilawa aik bande kay hath se doosre bande ko di jaye

    Imam Nasser Mohammad Al-Yemeni


    28 - 10 - 1432 AH
    27 - 09 - 2011 AD
    06:46 am
    ــــــــــــــــــ


    IMAM MAHDI MUNTAZIR AQEEDAH-E- SHAFAA SE INKAR KRTE HAIN JO ALLAH SWT KAY ILAWA AIK BANDE KAY HATH SE DOOSRE BANDE KO DI JAYE

    Shuru krta hoon Allah kay naam se jo bada meharbaan aur nehaya reham krne wala ha aur Durood o Slam mere dada Mohammed SAW par aur unke khaalis khandan par aur Allah SWT k tamam Ansaar Waahid Al Qahaar par aakhri yoam tak, Amma Baad
    Ae humare madoo kiye gaye Mehmaan Diyaa, mein yeh dekhta hoon keh aap fatwah dete hain Shafaa par jo keh Allah SWT k ilawa uske bande se doosre bandoa par ! Jab keh Allah SWT farmate hain keh koi bhi banda Zameen aur Asmaan mein nahin jo apne rab k ilawa kisi ko Shafaa de sake, aur hum apko batayein ga aur ap jaise aur inkaar krne waloan ko joy yeh maante hain keh Allah SWT k ilawah Shafaa bandoan se mangi ja sakti ha,
    }وَيَعْبُدُونَ مِن دُونِ اللَّـهِ مَا لَا يَضُرُّ‌هُمْ وَلَا يَنفَعُهُمْ وَيَقُولُونَ هَـٰؤُلَاءِ شُفَعَاؤُنَا عِندَ اللَّـهِ قُلْ أَتُنَبِّئُونَ اللَّـهَ بِمَا لَا يَعْلَمُ فِي السَّمَاوَاتِ وَلَا فِي الْأَرْ‌ضِ سُبْحَانَهُ وَتَعَالَىٰ عَمَّا يُشْرِ‌كُونَ ﴿١٨﴾]{صدق الله العظيم [يونس].
    اور یہ (لوگ) خدا کے سوا ایسی چیزوں کی پرستش کرتے ہیں جو نہ ان کا کچھ بگاڑ ہی سکتی ہیں اور نہ کچھ بھلا ہی کر سکتی ہیں اور کہتے ہیں کہ یہ خدا کے پاس ہماری سفارش کرنے والے ہیں۔ کہہ دو کہ کیا تم خدا کو ایسی چیز بتاتے ہو جس کا وجود اسے نہ آسمانوں میں معلوم ہوتا ہے اور نہ زمین میں۔ وہ پاک ہے اور (اس کی شان) ان کے شرک کرنے سے بہت بلند ہے ﴿۱۸﴾

    Aur mazeed apko Imam Mahdi ki tafseeli bayan mein hum wazeh bayan kar chuke hain jo keh mozu ha Shafaa Allah SWT kay haath ilawa apne bandoan kay hath se doosre bandoan kay liye, ussi se naqal krte huye Dia'a ko batate hain aur unko jo Allah k sath uske bandoan ko jorte hain Shafaa kay maamle mein, Aur yahan apko Thoas saboot dete hain jo keh wazeh Dalayal hain Shafaa k baare mein jo Allah SWT kay haath k ilawa aik bande se doosre bande se maangi jaye, Aur yeh Saboot apke liye Wazeh hone chaie jo keh Allah SWT ki taraf se jawab ha unke liye jo yeh samjhte hain ha Shafaa Allah SWT kay haath ilawa apne bandoan kay hath se doosre bandoan se mangna, Allah SAWT farmate hain jo sab se bade hain :
    {وَيَقُولُونَ هَـٰؤُلَاءِ شُفَعَاؤُنَا عِندَ اللَّـهِ قُلْ أَتُنَبِّئُونَ اللَّـهَ بِمَا لَا يَعْلَمُ فِي السَّمَاوَاتِ وَلَا فِي الْأَرْ‌ضِ سُبْحَانَهُ وَتَعَالَىٰ عَمَّا يُشْرِ‌كُونَ ﴿١٨﴾} صدق الله العظيم [يونس].
    اور کہتے ہیں کہ یہ خدا کے پاس ہماری سفارش کرنے والے ہیں۔ کہہ دو کہ کیا تم خدا کو ایسی چیز بتاتے ہو جس کا وجود اسے نہ آسمانوں میں معلوم ہوتا ہے اور نہ زمین میں ﴿۱۸﴾
    Lekin hum mazeed tafseel se apko iss tafseeli bayan mein batayein ga aur jaisa keh pehle bayan kar chuke hain aur woh mandarja zail hain :
    Aur mein kisi bhi Anbiya mein faraq nahin karta aur mein Musalmano mein se hoon,
    ASSALAM O ALAIKUM WA RAHMATULLAH I BARAKATUH , Ae sawal poochne wale mein IMAM MAHDI HOON, Durood o Salam mere Dada Muhammed Rasool Allah SAW par aur unke Khaalis khandan par aur unke Afdhal Sahaba Akram par jinhoan ne unka Androoni aur berooni Saath diya un sab par Durood o Salam, Jaisa keh Allah SWT bata chuke hain keh kis tarah Sahaba Akram ne Rasool Allah SAW ko Fatah Makkah se pehle badi Bahaduri aur Quwwat se unki Mushkilaat se nikala tha aur unke sab se mushkil waqt mein unka sath diya tha, Mein un sab sahaba akram ki tareef karta hoon jaisa k Allah swt apni Paak Ketab mein unki tareef krte hain, Allah swt farmate hain
    } مُّحَمَّدٌ رَّسُولُ اللَّهِ وَالَّذِينَ مَعَهُ أَشِدَّاءُ عَلَى الْكُفَّارِ رُحَمَاءُ بَيْنَهُمْ تَرَاهُمْ رُكَّعًا سُجَّدًا يَبْتَغُونَ فَضْلًا مِّنَ اللَّهِ وَرِضْوَانًا سِيمَاهُمْ فِي وُجُوهِهِم مِّنْ أَثَرِ السُّجُودِ ذَٰلِكَ مَثَلُهُمْ فِي التَّوْرَاةِ وَمَثَلُهُمْ فِي الْإِنجِيلِ كَزَرْعٍ أَخْرَجَ شَطْأَهُ فَآزَرَهُ فَاسْتَغْلَظَ فَاسْتَوَىٰ عَلَىٰ سُوقِهِ يُعْجِبُ الزُّرَّاعَ لِيَغِيظَ بِهِمُ الْكُفَّارَ وَعَدَ اللَّهُ الَّذِينَ آمَنُوا وَعَمِلُوا الصَّالِحَاتِ مِنْهُم مَّغْفِرَةً وَأَجْرًا عَظِيمًا{ ]صدق الله العظيم الفتح:29[
    (محمدﷺ خدا کے پیغمبر ہیں اور جو لوگ ان کے ساتھ ہیں وہ کافروں کے حق میں سخت ہیں اور آپس میں رحم دل، (اے دیکھنے والے) تو ان کو دیکھتا ہے کہ (خدا کے آگے) جھکے ہوئے سر بسجود ہیں اور خدا کا فضل اور اس کی خوشنودی طلب کر رہے ہیں۔ (کثرت) سجود کے اثر سے ان کی پیشانیوں پر نشان پڑے ہوئے ہیں۔ ان کے یہی اوصاف تورات میں (مرقوم) ہیں۔ اور یہی اوصاف انجیل میں ہیں۔ (وہ) گویا ایک کھیتی ہیں جس نے (پہلے زمین سے) اپنی سوئی نکالی پھر اس کو مضبوط کیا پھر موٹی ہوئی اور پھر اپنی نال پر سیدھی کھڑی ہوگئی اور لگی کھیتی والوں کو خوش کرنے تاکہ کافروں کا جی جلائے۔ جو لوگ ان میں سے ایمان لائے اور نیک عمل کرتے رہے ان سے خدا نے گناہوں کی بخشش اور اجر عظیم کا وعدہ کیا ہے ﴿۲۹﴾)
    Aur unhi mein AbuBaker Siddiq haq kay sath Rasool Allah saw kay sabqeen Ansaar mein se hain aur sab se behtreen dost jaan o maal se hain, Jaisa kay unka ziakr Allah Swt apni paak Kitab mein farmate hain :
    إِلَّا تَنصُرُوهُ فَقَدْ نَصَرَهُ اللَّهُ إِذْ أَخْرَجَهُ الَّذِينَ كَفَرُوا ثَانِيَ اثْنَيْنِ إِذْ هُمَا فِي الْغَارِ إِذْ يَقُولُ لِصَاحِبِهِ لَا تَحْزَنْ إِنَّ اللَّهَ مَعَنَا فَأَنزَلَ اللَّهُ سَكِينَتَهُ عَلَيْهِ وَأَيَّدَهُ بِجُنُودٍ لَّمْ تَرَوْهَا وَجَعَلَ كَلِمَةَ الَّذِينَ كَفَرُوا السُّفْلَىٰ وَكَلِمَةُ اللَّهِ هِيَ الْعُلْيَا وَاللَّهُ عَزِيزٌ حَكِيم صدق الله العظيم التوبة:40
    اگر تم پیغمبر کی مدد نہ کرو گے تو خدا اُن کا مددگار ہے (وہ وقت تم کو یاد ہوگا) جب ان کو کافروں نے گھر سے نکال دیا۔ (اس وقت) دو (ہی ایسے شخص تھے جن) میں (ایک ابوبکرؓ تھے) اور دوسرے (خود رسول الله) جب وہ دونوں غار (ثور) میں تھے اس وقت پیغمبر اپنے رفیق کو تسلی دیتے تھے کہ غم نہ کرو خدا ہمارے ساتھ ہے۔ تو خدا نے ان پر تسکین نازل فرمائی اور ان کو ایسے لشکروں سے مدد دی جو تم کو نظر نہیں آتے تھے اور کافروں کی بات کو پست کر دیا۔ اور بات تو خدا ہی کی بلند ہے۔ اور خدا زبردست (اور) حکمت والا ہے
    Mein Imam Mahdi Durud o Salam bhejta hoon apne baap Imam Ali RA Aur AbuBaker RA Aur Umar RA Aur Uthman RA aur tamam Sahaba e Rasool Allah SAW jo apni jaan maal se inke sath the, aur mein un sab ko salam paesh krte huye unki tareef krta hoon Ap SAW k Sabqeen Ansaar ko jinhoan ne Ap SAW ka Jaan o Maal se Fatah Makkah Mubarak se pehle har mushkilaat ka samna krte huye saath diya, Allah SWT unse khush ha aur woh Allah SWT se khush hain, Mazeed Tasdeeq krte huye Allah SWT farmate hain:
    لَّقَدْ رَضِيَ اللَّهُ عَنِ الْمُؤْمِنِينَ إِذْ يُبَايِعُونَكَ تَحْتَ الشَّجَرَةِ فَعَلِمَ مَا فِي قُلُوبِهِمْ فَأَنزَلَ السَّكِينَةَ عَلَيْهِمْ وَأَثَابَهُمْ فَتْحًا قَرِيبًا ﴿١٨﴾ صدق الله العظيم (الفتح)
    )}اے پیغمبر) جب مومن تم سے درخت کے نیچے بیعت کر رہے تھے تو خدا ان سے خوش ہوا۔ اور جو (صدق وخلوص) ان کے دلوں میں تھا وہ اس نے معلوم کرلیا۔ تو ان پر تسلی نازل فرمائی اور انہیں جلد فتح عنایت کی{
    Jaise kay AbuBaker aur Umer RA moamino mein se hain aur woh jinhaon ne Allah SWT ki Baya'at ki aur Rasool Allah SAW ki baya'at ki darkhat kay neeche, Aur unke liye Allah SWT ki taraf se basharat ha k woh moamineen mein se hain jin se woh bohat khush hain, Mazeed Tasdeeqan Allah SWT ka Qoal ha :
    لَّقَدْ رَضِيَ اللَّهُ عَنِ الْمُؤْمِنِينَ إِذْ يُبَايِعُونَكَ تَحْتَ الشَّجَرَةِ صدق الله العظيم؟
    (اے پیغمبر) جب مومن تم سے درخت کے نیچے بیعت کر رہے تھے
    Jaisa Kay Abu Suffiyan ka bete Muawiyah aur uske bete Yazeed k bare mein jo rawayat mein fatwa diya gaya ha woh haq aur sach pe hain kay woh moatbar loagoan mein Baaghi hain, Aur tum mujhe kabhi bhi kisi musalman pe laanat bhejte nahin dekho hatta kay woh ghalat bhi hoan magar munafqeen mein se na hoan joy eh zahir krte hain k woh yaqeen rakhte hain lekin apni munafqat chupaate hain, iske baad beharhaal Allah sab se behtreen janne wala ha aur jo janta ha unke andar kya ha, Lehaaza mein Allah SWT ka kalam bulan krta hoon :
    تِلْكَ أُمَّةٌ قَدْ خَلَتْ لَهَا مَا كَسَبَتْ وَلَكُم مَّا كَسَبْتُمْ وَلَا تُسْأَلُونَ عَمَّا كَانُوا يَعْمَلُونَ (البقرة(134:
    (یہ جماعت گزرچکی۔ ان کو اُن کے اعمال (کا بدلہ ملے گا) اور تم کو تمھارے اعمال (کا) اور جو عمل وہ کرتے تھے ان کی پرسش تم سے نہیں ہوگی)
    Ae Ilm Rakhne wale, Agar ap waqai mein bahami azam rakhte hain tou Imam Mahdi kay sath mil kar musalmano kay zakhmoan par marham lagayein aur unke diloan ko pak karein unko mutahid karein unki darja bandi ka liye aur sab se mazbooat quwat banayein, Allah ki ijazat kay sath hum unhein sab se behtreen qoam bana dein,taake woh apne mazhab ko firqoan aur jamatoan mein taqseem na karein, Beshak yeh amal Allah SWT ki kitab (Quran) mein mamnoua hai aur jaise keh Allah SWT farmate hain :
    وَلَا تَكُونُوا كَالَّذِينَ تَفَرَّقُوا وَاخْتَلَفُوا مِن بَعْدِ مَا جَاءَهُمُ الْبَيِّنَاتُ وَأُولَٰئِكَ لَهُمْ عَذَابٌ عَظِيمٌ آل عمران105:
    (اور ان لوگوں کی طرح نہ ہونا جو متفرق ہو گئے اور احکام بین آنے کے بعد ایک دوسرےسے (خلاف و) اختلاف کرنے لگے یہ وہ لوگ ہیں جن کو قیامت کے دن بڑا عذاب ہوگا(
    Kya ap Allah SWT kay Kalaam ki Sachayii k bare mein jante hain
    وَلَا تَكُونُوا كَالَّذِينَ تَفَرَّقُوا وَاخْتَلَفُوا مِن بَعْدِ مَا جَاءَهُمُ الْبَيِّنَاتُ آل عمران105:
    (اور ان لوگوں کی طرح نہ ہونا جو متفرق ہو گئے اور احکام بین آنے کے بعد ایک دوسرےسے (خلاف و) اختلاف کرنے لگے)

    Yeh aayat muhkimat hain jo ap jaise jahil k liye saaf matlab batati hain, Allah SWT kay kalam se mazeed tasdeeq krte huye batate hain :
    {إِن تَجْتَنِبُوا كَبَائِرَ مَا تُنْهَوْنَ عَنْهُ نُكَفِّرْ عَنكُمْ سَيِّئَاتِكُمْ وَنُدْخِلْكُم مُّدْخَلًا كَرِيمًا} صدق الله العظيم [النساء:31].
    گر تم بڑے بڑے گناہوں سے جن سے تم کو منع کیا جاتا ہے اجتناب رکھو گے تو ہم تمہارے (چھوٹے چھوٹے) گناہ معاف کردیں گے اور تمہیں عزت کے مکانوں میں داخل کریں گے ﴿۳۱﴾
    Beshak yeh sakht cheezein hi deen mein ikhtelaaf paeda krti hain jo musalmano mein firqa pasandi aur mukhtalif jamatein banati hain, lehaaza ap nakam hojayein ga aur aur apko dhachka mile ga jaisa k (AB) horaha ha,yaqeenan yeh aisi sakht cheezein hain jinhein ap mazhab mein mutafariq qarar dete hain jo musalmano ki tabahi ka sabab ban rahi ha, aur issi liye Allah SWT ne apse WAADA kiya ha aur apko AAgah kiya ha keh Allah SWT kay hokum ko na manne par ap par sakht azaab aaye ga, Allah SWT kay kalam se tasdeeq krte huye batate hain jo sab se bada ha :
    {وَلَا تَكُونُوا كَالَّذِينَ تَفَرَّقُوا وَاخْتَلَفُوا مِن بَعْدِ مَا جَاءَهُمُ الْبَيِّنَاتُ وَأُولَٰئِكَ لَهُمْ عَذَابٌ عَظِيمٌ} صدق الله العظيم [آل عمران:105]
    اور ان لوگوں کی طرح نہ ہونا جو متفرق ہو گئے اور احکام بین آنے کے بعد ایک دوسرےسے (خلاف و) اختلاف کرنے لگے یہ وہ لوگ ہیں جن کو قیامت کے دن بڑا عذاب ہوگا ﴿۱۰۵﴾
    Aur Azaab ki wajah yeh ha keh yeh kitab (Qur'an) mein di gayi wazeh aayat jo keh Aayat muhkimat hain unse murr chuke hain. Mazeed Allah SWT ki kitab se tasdeeq krte huye batate hain jo sab se bada ha :
    {وَلَقَدْ أَنزَلْنَا إِلَيْكَ آيَاتٍ بَيِّنَاتٍ وَمَا يَكْفُرُ بِهَا إِلَّا الْفَاسِقُونَ} صدق الله العظيم [البقرة:99]
    اور ہم نے تمہارے پاس سلجھی ہوئی آیتیں ارسال فرمائی ہیں، اور ان سے انکار وہی کرتے ہیں جو بدکار ہیں ﴿۹۹﴾

    Iss liye Imam Mahdi Muslamano aur inke mumalik kay Ulmaa aur ap mein paaye jane wale jaahiloan ko kitabi Aayat (Qur'an) ki daleelo se behas krne ki Daawat de rahe hain,
    Sawal yeh ha jo Imam Mahdi sab Muslim Ulamaa se poochte hain : Woh kyun nahin jawab dete Imam Mahdi kay Daawat ka jo kay Qur'an Atheem ki daleeloan se behas k mutaliq ha agar woh isko mante hain ? Aur woh ab bhi un loagoan ka peecha kar rahe hain jo Ahl e Kitab hain Allah SWT kay Qur'an Atheem ki daleeloan se murr chuke hain ? Allah SWT sab se bade hain farmate hain :
    {أَلَمْ تَرَ إِلَى الَّذِينَ أُوتُوا نَصِيبًا مِّنَ الْكِتَابِ يُدْعَوْنَ إِلَىٰ كِتَابِ اللَّهِ لِيَحْكُمَ بَيْنَهُمْ ثُمَّ يَتَوَلَّىٰ فَرِيقٌ مِّنْهُمْ وَهُم مُّعْرِضُونَ صدق الله العظيم [آل عمران:23{]
    (بھلا تم نے ان لوگوں کو نہیں دیکھا جن کو کتاب (خدا یعنی تورات سے) بہرہ دیا گیا اور وہ (اس) کتاب الله کی طرف بلائے جاتے ہیں تاکہ وہ (ان کے تنازعات کا) ان میں فیصلہ کر دے تو ایک فریق ان میں سے کج ادائی کے ساتھ منہ پھیر لیتا ہے)
    Yehi Wajah ha keh in par hokum (hokum ha Ahl al Kitab par) hai jis par woh apne deen mein ikhtelaf rakhte hain, Mazeed Allah SWT ki kitab se saabit krte hain :
    }وَأَنزَلْنَا إِلَيْكَ الْكِتَابَ بِالْحَقِّ مُصَدِّقًا لِّمَا بَيْنَ يَدَيْهِ مِنَ الْكِتَابِ وَمُهَيْمِنًا عَلَيْهِ فَاحْكُم بَيْنَهُم بِمَا أَنزَلَ اللَّهُ وَلَا تَتَّبِعْ أَهْوَاءَهُمْ عَمَّا جَاءَكَ مِنَ الْحَقِّ (المائدة(48: {
    ( اور (اے پیغمبر!) ہم نے تم پر سچی کتاب نازل کی ہے جو اپنے سے پہلی کتابوں کی تصدیق کرتی ہے اور ان (سب) پر شامل ہے تو جو حکم خدا نے نازل فرمایا ہے اس کے مطابق ان کا فیصلہ کرنا اور حق جو تمہارے پاس آچکا ہے اس کو چھوڑ کر ان کی خواہشوں کی پیروی نہ کرنا ہم نے تم میں سے ہر ایک (فرقے) کے لیے ایک دستور اور طریقہ مقرر کیا ہے اور اگر خدا چاہتا تو سب کو ایک ہی شریعت پر کر دیتا مگر جو حکم اس نے تم کو دیئے ہیں ان میں وہ تمہاری آزمائش کرنی چاہتا ہے سو نیک کاموں میں جلدی کرو تم سب کو خدا کی طرف لوٹ کر جانا ہے پھر جن باتوں میں تم کو اختلاف تھا وہ تم کو بتا دے گا )
    Aur Allah SWT jo sab se bade farmate hain :
    إِنَّ هَٰذَا الْقُرْآنَ يَقُصُّ عَلَىٰ بَنِي إِسْرَائِيلَ أَكْثَرَ الَّذِي هُمْ فِيهِ يَخْتَلِفُونَ (النمل:76) {
    (بےشک یہ قرآن بنی اسرائیل کے سامنے اکثر باتیں جن میں وہ اختلاف کرتے ہیں، بیان کر دیتا ہے)
    Lekin woh di gayi Daawat pe Allah SWT ki Kitab kay faisle ko Qaede apnane se murr gaye.Allah SWT farmate hain :
    {أَلَمْ تَرَ إِلَى الَّذِينَ أُوتُوا نَصِيبًا مِّنَ الْكِتَابِ يُدْعَوْنَ إِلَىٰ كِتَابِ اللَّهِ لِيَحْكُمَ بَيْنَهُمْ ثُمَّ يَتَوَلَّىٰ فَرِيقٌ مِّنْهُمْ وَهُم مُّعْرِضُونَ )آل عمران:23({
    (بھلا تم نے ان لوگوں کو نہیں دیکھا جن کو کتاب (خدا یعنی تورات سے) بہرہ دیا گیا اور وہ (اس) کتاب الله کی طرف بلائے جاتے ہیں تاکہ وہ (ان کے تنازعات کا) ان میں فیصلہ کر دے تو ایک فریق ان میں سے کج ادائی کے ساتھ منہ پھیر لیتا ہے)
    Sawal yeh ha keh : Ap inke Eman ki perwi kyun kar rahe hain aur Allah SWT ki kitab kay Aehkamat aur faisle se kyun murr rahe hain jaise kay woh
    Murr chuke hain ? Aur ap unke raste pe kyun chalte hain aur Qurani Aayat se murr chuke hain jo keh bilkul saaf paigham deti hain Ulmaa ko aur ap jaise bhatke huye k liye ? Kya ap apne apko un logaon mein qabool karein ga jo Gunahgaar hain aur kitab (Qur'an) mein diye gaye saaf dalayal jo keh Ulmaa aur ap jaise na insaf murr chuke hain ? Ap ko Allah SWT ka kalam yaad rakhna chaie jo keh bohat bada ha :
    {وَلَقَدْ أَنزَلْنَا إِلَيْكَ آيَاتٍ بَيِّنَاتٍ وَمَا يَكْفُرُ بِهَا إِلَّا الْفَاسِقُونَ} صدق الله العظيم (البقرة:99)
    (اور ہم نے تمہارے پاس سلجھی ہوئی آیتیں ارسال فرمائی ہیں، اور ان سے انکار وہی کرتے ہیں جو بدکار ہیں (
    Yeh Iss wajah se hai kyun ki yeh Aayat kitaboan ki MAA (Qur'an) mein se hain jo keh wazih Dalayal hain, Yeh Kitab (Qur'an) ki Bunyad hain. Mazeed Allah SWT jo sab se bada ha uske kalam se batate hain :
    )هوَ الَّذِي أَنزَلَ عَلَيْكَ الْكِتَابَ مِنْهُ آيَاتٌ مُّحْكَمَاتٌ هُنَّ أُمُّ الْكِتَابِ} صدق الله العظيم [آل عمران:7(
    }وہی ہے جس نے تجھ پر کتاب اتاری اس میں بعض آیتیں محکم ہیں (جن کے معنیٰ واضح ہیں) وہ کتاب کی اصل ہیں{
    Aur Kitab (Qur'an) ki Aaytoan se wazih Dalayal hain Ulmaa aur ap jaise Na Insafi krne walo ka liye Allah SWT ka kalam sab se bada ha :
    }وَأَنذِرْ بِهِ الَّذِينَ يَخَافُونَ أَن يُحْشَرُوا إِلَىٰ رَبِّهِمْ لَيْسَ لَهُم مِّن دُونِهِ وَلِيٌّ وَلَا شَفِيعٌ لَّعَلَّهُمْ يَتَّقُونَ} صدق الله العظيم [الأنعام:51{
    )اور اس قرآن کے ذریعے سے ان لوگو ں کو ڈرا جنہیں اس کا ڈر ہے کہ وہ اپنے رب کے سامنے جمع کیے جائیں گے اس طرح پر کہ الله کے سوا ان کوئی مددگار اور سفارش کرنے والا نہ ہو گا تاکہ وہ پرہیزگار ہوجائیں(
    Aur Allah SWT ka kalam jo sab se bada ha :
    (يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا أَنفِقُوا مِمَّا رَزَقْنَاكُم مِّن قَبْلِ أَن يَأْتِيَ يَوْمٌ لَّا بَيْعٌ فِيهِ وَلَا خُلَّةٌ وَلَا شَفَاعَةٌ وَالْكَافِرُونَ هُمُ الظَّالِمُونَ} صدق الله العظيم البقرة( {254:
    }اے ایمان والو! جو ہم نے تمہیں رزق دیا ہے اس میں سے خرچ کرو اس دن کے آنے سے پہلے جس میں نہ کوئی خرید و فروخت ہو گی اور نہ کوئی دوستی اور نہ کوئی سفارش اور کافر وہی ظالم ہیں{
    Lekin Bad Qismati se ap khud ko uss jagah paye ga jo Kitab(Qur'an) ki wazih aayat muhkimat (woh aayat jin ka matlab Qur'an mein wazih ha) Qur'an ki Maa mani jati hain uss se murr chuke hain, Aur ap Shafaat mein Aayat Mutashibihat krte hain aur unki wazahat uss tarha nahin jis tarha ap uska ka Daawa krte hain! Kaise ? Inka ka kehna ha keh woh ussi tarha ki Aayat hain jo inki Zaahri Shakal kay ilawa inke liye bayanat bayan krti hain jo keh mubaynah toar par hain, Aur Allah SWT ne apko unki beruni matlab kay sath Roza rakhne mein hokum nahin diya kyuki woh Kitab kay Raaz mein se hain, Aur Allah SWT kay siwa koi bhi iski Ta'abeer nahin janta aur jo loag iski Ta'abeer jante hain woh muntakhib kardah Imam hain ( Jinhein Allah SWT ne mutakhab kiy) Agar woh apke Darmyan Qayam hain, Aur woh agar ab Haathir nahin hain tou Yaqeenan Allah SWT ne tumhein hokum nahin diya tha keh woh inke berooni matlab pea mal karein ; Haqeeqat mein unhoan ne apko hokum diya ha keh kitab (Qur'an) ki faisla kun Aayat kay wazih dalayal par amal karein jin mein Ulmaa aur ap jaise na insafi krne wale hain jin par Arabi zubaan saaf aur wazih hai. Lekin ap ne iss tarah kay Ilzamat ki perawi ki jis kay nateeje mein tanaazat kay bayanat aur rawayat ki talaash ki gayi thi jis mein izaafah kiya gaya hai jis ki wajah se kuch kay matlab berooni toar par milte hain, aur issi liye Allah SWT farmate hain :
    }هُوَ الَّذِي أَنزَلَ عَلَيْكَ الْكِتَابَ مِنْهُ آيَاتٌ مُّحْكَمَاتٌ هُنَّ أُمُّ الْكِتَابِ وَأُخَرُ مُتَشَابِهَاتٌ فَأَمَّا الَّذِينَ فِي قُلُوبِهِمْ زَيْغٌ فَيَتَّبِعُونَ مَا تَشَابَهَ مِنْهُ ابْتِغَاءَ الْفِتْنَةِ وَابْتِغَاءَ تَأْوِيلِهِ وَمَا يَعْلَمُ تَأْوِيلَهُ إِلَّا اللَّهُ وَالرَّاسِخُونَ فِي الْعِلْمِ يَقُولُونَ آمَنَّا بِهِ كُلٌّ مِّنْ عِندِ رَبِّنَا وَمَا يَذَّكَّرُ إِلَّا أُولُو الْأَلْبَابِ{صدق الله العظيم [آل عمران:7.
    }وہی تو ہے جس نے تم پر کتاب نازل کی جس کی بعض آیتیں محکم ہیں (اور) وہی اصل کتاب ہیں اور بعض متشابہ ہیں تو جن لوگوں کے دلوں میں کجی ہے وہ متشابہات کا اتباع کرتے ہیں تاکہ فتنہ برپا کریں اور مراد اصلی کا پتہ لگائیں حالانکہ مراد اصلی خدا کے سوا کوئی نہیں جانتا اور جو لوگ علم میں دست گاہ کامل رکھتے ہیں وہ یہ کہتے ہیں کہ ہم ان پر ایمان لائے یہ سب ہمارے پروردگار کی طرف سے ہیں اور نصیحت تو عقل مند ہی قبول کرتے ہیں{
    Shayad koi mujhe yahan roke ga aur yeh aik sawal bhi kare ga aur kahe ga "O Nasser Mohammed Al Yemani kya yeh sach nahin ha keh Sahih Hadeeth Qurani Aayat se Mutshabihat rakhti hain Rasool Allah SAW ki hadeeth se tasdeeq krte huye aap SAW farmte hain :
    ]ما تشابه مع القرآن فهو مني[
    [ Jo Qur'an se milta ha woh Yaqeenan mujhse ha ]?" Aur phir Imam Mahdi Nasser Mohammed Al Yemani unhein Jawab dete huye kahein ga : Allah kay Hukum se Haan Jee, Aik Shart pe agar koi bhi hadeeth Qur'an ki Aayat Muhkimat Bayiinat se takrar na rakhti hoan, Aur Yaqeenan Allah SWT jo sab se bada ha unke ke kalam mein koi bhi Tazaad nahin hona chaie, Aaiye hum apki Maloomat mein mazeed Izafah krte hain, Yaqeenan Aayat Mutashabihat ka asal matlab bilkul mukhtalif ha jaisa keh zahiran beeroni wazeh hota ha, Jo keh Allah SWT k ilawa koi nahin janta, Lekin aj kay Hadeeth dalayal Fitnoan se usko milaya jata ha jo keh unke berooni matlab se bilkul milte hain, agar aise dekhein tou Allah SWT aisa kyun farmate hain :
    }وَمَا يَعْلَمُ تَأْوِيلَهُ إِلَّا اللَّهُ{
    { Koi inka matlab nahin janta siwaye Allah SWT kay }? Inka maqsad ha Aayat Mutashabihat, Iss liye agar hadeeth Aayat ki tafseer de tou woh kabhi bhi berooni matlab bhi sahi se bayan kar sakti.
    Lekin ae Qoam, kya apko yeh nahin pata keh aayat mutashabihat kay berooni matlab bilkul mukhtalif hain aayat muhkimaat se jo kay kitab (Qur'an) ki maa hain ? Aur issi liye Allah swt ne un aayat (Mutashabihat) mein raaz rakh jo keh unko diya gaya jo bade ilm wale hain jo tum mein se hain aur woh kabhi bhi apne se banayii gayi baatein Allah k sath nahin jorte, Allah swt ne ap par koi dalayal nahin banaye Aayat Mutashabihat ko le kar kyun ki unka sahi matlab Allah swt k ilawa koi nahin janta, Lekin Allah Swt ne humein sirf un par Emaan rakhne ka hokum diya keh woh Allah SWT hi ki bheji gayi aayat hain aur Allah SWT ne humein yeh hokum diya k hum aayat muhkimat par amal karein, Aur jo inke khelaaf hain aur aayat mutashabihat k berooni matlab par amal krte hain unke dil andar se murr chuke hain, aur iss liye Allah SWT farmate hain :
    }هُوَ الَّذِي أَنزَلَ عَلَيْكَ الْكِتَابَ مِنْهُ آيَاتٌ مُّحْكَمَاتٌ هُنَّ أُمُّ الْكِتَابِ وَأُخَرُ مُتَشَابِهَاتٌ فَأَمَّا الَّذِينَ فِي قُلُوبِهِمْ زَيْغٌ فَيَتَّبِعُونَ مَا تَشَابَهَ مِنْهُ ابْتِغَاءَ الْفِتْنَةِ وَابْتِغَاءَ تَأْوِيلِهِ وَمَا يَعْلَمُ تَأْوِيلَهُ إِلَّا اللَّهُ وَالرَّاسِخُونَ فِي الْعِلْمِ يَقُولُونَ آمَنَّا بِهِ كُلٌّ مِّنْ عِندِ رَبِّنَا وَمَا يَذَّكَّرُ إِلَّا أُولُو الْأَلْبَابِ} صدق الله العظيم [آل عمران:7 {
    }وہی تو ہے جس نے تم پر کتاب نازل کی جس کی بعض آیتیں محکم ہیں (اور) وہی اصل کتاب ہیں اور بعض متشابہ ہیں تو جن لوگوں کے دلوں میں کجی ہے وہ متشابہات کا اتباع کرتے ہیں تاکہ فتنہ برپا کریں اور مراد اصلی کا پتہ لگائیں حالانکہ مراد اصلی خدا کے سوا کوئی نہیں جانتا اور جو لوگ علم میں دست گاہ کامل رکھتے ہیں وہ یہ کہتے ہیں کہ ہم ان پر ایمان لائے یہ سب ہمارے پروردگار کی طرف سے ہیں اور نصیحت تو عقل مند ہی قبول کرتے ہیں{
    Iss liye Allah swt ne aayat muhkimat par amal krne ka humkum diya aur aayat mutashabihat par Emaan rakhne ka hokum diya jis ka sahi matlab Allah swt k ilawa koi nahin janta, kya ap Taqwa nahin rakhte ? aur lekin Imam Mahdi mein jise Allah swt ne aayat muhkimat aur mutashabihat ka ilm ata kiya aur ap par shahid banaya k mein haq par hoon aur agar ap kitab Allah ki daawat se murr gaye. Allah SWT k qoal se mazeed tasdeeq krte hain :
    }وَيَقُولُ الَّذِينَ كَفَرُوا لَسْتَ مُرْسَلًا قُلْ كَفَىٰ بِاللَّهِ شَهِيدًا بَيْنِي وَبَيْنَكُمْ وَمَنْ عِندَهُ عِلْمُ الْكِتَابِ} صدق الله العظيم [الرعد:43{
    ]اور کافر لوگ کہتے ہیں کہ تم (خدا کے) رسول نہیں ہو۔ کہہ دو کہ میرے اور تمہارے درمیان خدا اور وہ شخص جس کے پاس کتاب (آسمانی) کا علم ہے گواہ کافی ہیں[
    Iss liye Allah swt ne mujhe Ilm e kitab ata kiya yaqeni toar par mujhe aayat muhkimat ka matlab sekhaya aur mere rab ne mujhe aayat mutashabihat ka matlab bhi bataya jiski tafseer ya matlab siwaye Allah swt k koi nahin janta aur lekin bohat se ap mein se nahin jante jabke mein apko daawat de raha hoon sahi aehkakamat ki tarah jo aayat al muhkemat hain aur yehi kitab (Qur'an) ki maa hain ap mein se koi bhi inka inkaar nahin kar sakta jab tak k uske dil haq se murr chuka na ho, aur kaun Allah SWT kay kalam k baare mein nahin janta :
    }يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا أَنفِقُوا مِمَّا رَزَقْنَاكُم مِّن قَبْلِ أَن يَأْتِيَ يَوْمٌ لَّا بَيْعٌ فِيهِ وَلَا خُلَّةٌ وَلَا شَفَاعَةٌ وَالْكَافِرُونَ هُمُ الظَّالِمُونَ}؟ صدق الله العظيم [البقرة:254 {
    }اے ایمان والو جو (مال) ہم نے تم کو دیا ہے اس میں سے اس دن کے آنے سے پہلے پہلے خرچ کرلو جس میں نہ (اعمال کا) سودا ہو اور نہ دوستی اور سفارش ہو سکے اور کفر کرنے والے لوگ ظالم ہیں{
    Imam Mahdi ka sawal ha : Aisa nahin ha kay Allah SWT khud inkar krte hain aur wazeh krte hain k ghair Allah SWT kay unke khadimoan se shafaa mangna jayez nahin ha, aur iss liye Allah SWT jo sab se bade hain farmate hain :
    }وَأَنذِرْ بِهِ الَّذِينَ يَخَافُونَ أَن يُحْشَرُوا إِلَىٰ رَبِّهِمْ لَيْسَ لَهُم مِّن دُونِهِ وَلِيٌّ وَلَا شَفِيعٌ لَّعَلَّهُمْ يَتَّقُونَ} صدق الله العظيم [الأنعام:51{
    } اور جو لوگ جو خوف رکھتے ہیں کہ اپنے پروردگار کے روبرو حاضر کئے جائیں گے (اور جانتے ہیں کہ) اس کے سوا نہ تو ان کا کوئی دوست ہوگا اور نہ سفارش کرنے والا، ان کو اس (قرآن) کے ذریعے سے نصیحت کر دو تاکہ پرہیزگار بنیں{
    اس کے سوا نہ تو ان کا کوئی دوست ہوگا اور نہ سفارش کرنے والا Allah SWT k qoal ki taraf dekhiye : aur lekin woh moamineen jo Allah SWT par yaqeen rakhte hain lekin andar se mushrik hain mujhe kahein ga thehriye thehriye Ae Nasir Mohammed Al Yemani Shifaa ka inkaar sirf kufaar k liye hai bulke moamineen k liye Allah SWT kay haath mein hai issi liye Mohammed SAW unke liye Shafaa kar sakte hain, aur phir Imam Mahdi jawab dein ga aur kahein ga : hum dekhein ga k ap sachoan mein se hain ya jhootoan mein se hain yaa un mein se hain jo Allah SWT ki taraf se bolte hain aur koi bhi ilm nahin rakhte aur hum khud yeh dekhein ga aur faisala karein ga Allah SWT ki kitab ko darmyan mein rakhte huye aur Allah SWT kay kalam se jo sab se bada ha :
    {يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا أَنفِقُوا مِمَّا رَزَقْنَاكُم مِّن قَبْلِ أَن يَأْتِيَ يَوْمٌ لَّا بَيْعٌ فِيهِ وَلَا خُلَّةٌ وَلَا شَفَاعَةٌ} صدق الله العظيم [البقرة:254].
    }اے ایمان والو جو (مال) ہم نے تم کو دیا ہے اس میں سے اس دن کے آنے سے پہلے پہلے خرچ کرلو جس میں نہ (اعمال کا) سودا ہو اور نہ دوستی اور سفارش ہو سکے {
    Ap yeh dekhein ga Allah SWT saaf iss Aayat mein inkaar krte hain keh hatta moamineen bhi Allah se sifarish nahin kar sakte shafaa kay liye :
    {يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا أَنفِقُوا مِمَّا رَزَقْنَاكُم مِّن قَبْلِ أَن يَأْتِيَ يَوْمٌ لَّا بَيْعٌ فِيهِ وَلَا خُلَّةٌ وَلَا شَفَاعَةٌ} صدق الله العظيم [البقرة:254].
    }اے ایمان والو جو (مال) ہم نے تم کو دیا ہے اس میں سے اس دن کے آنے سے پہلے پہلے خرچ کرلو جس میں نہ (اعمال کا) سودا ہو اور نہ دوستی اور سفارش ہو سکے {
    Wazih sawal yeh ha keh : aisa nahin ha keh (LAA) yeh lafz arabi zuban ki lughat mein nafi ha, aur issi liye ap yeh nahin kehte (laa ilaha illal Allah) ?
    Aur iss liye ap yeh dekhein ga k yahan bhi Nafi Allah SWT k kalam mein }وَلَا شَفَاعَةٌ aati ha : {
    Aur iss liye Nahin Shafaa kisi na Wali aur na Nabi siwaye Allah SWT k haath moamineen k liye , aur issi tarah lafz (Lais) ; aur kya ap yeh nahin jante k yeh do lafz Shadeed Nafi ka ishara dete hain, issi liye Allah SWT farmate hain :
    }لَيْسَ كَمِثْلِهِ شَيْءٌ وَهُوَ السَّمِيعُ الْبَصِيرُ{ صدق الله العظيم [الشورى:11[
    ]اس جیسی کوئی چیز نہیں۔ اور وہ دیکھتا سنتا ہے[
    Aur iss liye Allah SWT farmate hain :
    وَأَنذِرْ بِهِ الَّذِينَ يَخَافُونَ أَن يُحْشَرُوا إِلَىٰ رَبِّهِمْ لَيْسَ لَهُم مِّن دُونِهِ وَلِيٌّ وَلَا شَفِيعٌ لَّعَلَّهُمْ يَتَّقُونَ} صدق الله العظيم [الأنعام:51].
    }اور جو لوگ جو خوف رکھتے ہیں کہ اپنے پروردگار کے روبرو حاضر کئے جائیں گے (اور جانتے ہیں کہ) اس کے سوا نہ تو ان کا کوئی دوست ہوگا اور نہ سفارش کرنے والا، ان کو اس (قرآن) کے ذریعے سے نصیحت کر دو تاکہ پرہیزگار بنیں{
    Kya tum yeh nahin dekhte keh Imam Mahdi kitab (Qur'an) ki Aayat jo keh Saaf aur wazih hain unse behass krta hoon Ulmaa se aur ap jaise jahiloan se, Woh kitab ki Maa hain jo keh Aqeedah Haq ki tasheeh krti hain ? tou kyun nahin unki Peravi krte jo kay saaf aur wazeh hain Ulmaa aur ap jaise jahlioan kay liye , kya ap gunahgaroan mein se hain ? Allah SWT farmate hain :.
    {وَلَقَدْ أَنزَلْنَا إِلَيْكَ آيَاتٍ بَيِّنَاتٍ وَمَا يَكْفُرُ بِهَا إِلَّا الْفَاسِقُونَ} صدق الله العظيم [البقرة:99].
    } اور ہم نے تمہارے پاس سلجھی ہوئی آیتیں ارسال فرمائی ہیں، اور ان سے انکار وہی کرتے ہیں جو بدکار ہیں {
    {وَمَنْ أَظْلَمُ مِمَّن ذُكِّرَ بِآيَاتِ رَبِّهِ فَأَعْرَضَ عَنْهَا وَنَسِيَ مَا قَدَّمَتْ يَدَاهُ إِنَّا جَعَلْنَا عَلَىٰ قُلُوبِهِمْ أَكِنَّةً أَن يَفْقَهُوهُ وَفِي آذَانِهِمْ وَقْرًا وَإِن تَدْعُهُمْ إِلَى الْهُدَىٰ فَلَن يَهْتَدُوا إِذًا أَبَدًا} [الكهف:57].
    } اور اس سے ظالم کون جس کو اس کے پروردگار کے کلام سے سمجھایا گیا تو اُس نے اس سے منہ پھیر لیا۔ اور جو اعمال وہ آگے کرچکا اس کو بھول گیا۔ ہم نے ان کے دلوں پر پردے ڈال دیئے کہ اسے سمجھ نہ سکیں۔ اور کانوں میں ثقل (پیدا کردیا ہے کہ سن نہ سکیں) اور اگر تم ان کو رستے کی طرف بلاؤ تو کبھی رستے پر نہ آئیں گے{
    {هُوَ الَّذِي أَنزَلَ عَلَيْكَ الْكِتَابَ مِنْهُ آيَاتٌ مُّحْكَمَاتٌ هُنَّ أُمُّ الْكِتَابِ}
    [آل عمران:7].
    }وہی تو ہے جس نے تم پر کتاب نازل کی جس کی بعض آیتیں محکم ہیں (اور) وہی اصل کتاب ہیں{
    Allah SWT farmate hain :
    اللَّهُ الَّذِي خَلَقَ السَّمَاوَاتِ وَالْأَرْضَ وَمَا بَيْنَهُمَا فِي سِتَّةِ أَيَّامٍ ثُمَّ اسْتَوَىٰ عَلَى الْعَرْشِ مَا لَكُم مِّن دُونِهِ مِن وَلِيٍّ وَلَا شَفِيعٍ أَفَلَا تَتَذَكَّرُونَ} [السجدة:4].
    }خدا ہی تو ہے جس نے آسمانوں اور زمین کو اور جو چیزیں ان دونوں میں ہیں سب کو چھ دن میں پیدا کیا پھر عرش پر جا ٹھہرا۔ اس کے سوا نہ تمہارا کوئی دوست ہے اور نہ سفارش کرنے والا۔ کیا تم نصیحت نہیں پکڑتے؟{
    Allah SWT farmate hain :
    {وَذَرِ الَّذِينَ اتَّخَذُوا دِينَهُمْ لَعِبًا وَلَهْوًا وَغَرَّتْهُمُ الْحَيَاةُ الدُّنْيَا وَذَكِّرْ بِهِ أَن تُبْسَلَ نَفْسٌ بِمَا كَسَبَتْ لَيْسَ لَهَا مِن دُونِ اللَّهِ وَلِيٌّ وَلَا شَفِيعٌ وَإِن تَعْدِلْ كُلَّ عَدْلٍ لَّا يُؤْخَذْ مِنْهَا أُولَٰئِكَ الَّذِينَ أُبْسِلُوا بِمَا كَسَبُوا لَهُمْ شَرَابٌ مِّنْ حَمِيمٍ وَعَذَابٌ أَلِيمٌ بِمَا كَانُوا يَكْفُرُونَ} [الأنعام:70].
    } اور جن لوگوں نے اپنےدین کو کھیل اور تماشا بنا رکھا ہے اور دنیا کی زندگی نے ان کو دھوکے میں ڈال رکھا ہے ان سے کچھ کام نہ رکھو ہاں اس (قرآن) کے ذریعے سے نصیحت کرتے رہو تاکہ (قیامت کے دن) کوئی اپنے اعمال کی سزا میں ہلاکت میں نہ ڈالا جائے (اس روز) خدا کےسوا نہ تو کوئی اس کا دوست ہوگا اور نہ سفارش کرنے والا۔ اور اگر وہ ہر چیز (جو روئے زمین پر ہے بطور) معاوضہ دینا چاہے تو وہ اس سے قبول نہ ہو یہی لوگ ہیں کہ اپنے اعمال کے وبال میں ہلاکت میں ڈالے گئے ان کے لئے پینے کو کھولتا ہوا پانی اور دکھ دینے والا عذاب ہے اس لئے کہ کفر کرتے تھے{
    Allah SWT farmate hain :
    {وَيَعْبُدُونَ مِن دُونِ اللَّهِ مَا لَا يَضُرُّهُمْ وَلَا يَنفَعُهُمْ وَيَقُولُونَ هَٰؤُلَاءِ شُفَعَاؤُنَا عِندَ اللَّهِ قُلْ أَتُنَبِّئُونَ اللَّهَ بِمَا لَا يَعْلَمُ فِي السَّمَاوَاتِ وَلَا فِي الْأَرْضِ سُبْحَانَهُ وَتَعَالَىٰ عَمَّا يُشْرِكُونَ} [يونس:18].
    }اور یہ (لوگ) خدا کے سوا ایسی چیزوں کی پرستش کرتے ہیں جو نہ ان کا کچھ بگاڑ ہی سکتی ہیں اور نہ کچھ بھلا ہی کر سکتی ہیں اور کہتے ہیں کہ یہ خدا کے پاس ہماری سفارش کرنے والے ہیں۔ کہہ دو کہ کیا تم خدا کو ایسی چیز بتاتے ہو جس کا وجود اسے نہ آسمانوں میں معلوم ہوتا ہے اور نہ زمین میں۔ وہ پاک ہے اور (اس کی شان) ان کے شرک کرنے سے بہت بلند ہے{
    Allah SWT farmate hain :
    {وَأَنذِرْهُمْ يَوْمَ الْآزِفَةِ إِذِ الْقُلُوبُ لَدَى الْحَنَاجِرِ كَاظِمِينَ مَا لِلظَّالِمِينَ مِنْ حَمِيمٍ وَلَا شَفِيعٍ يُطَاعُ} صدق الله العظيم [غافر:18].
    }اور ان کو قریب آنے والے دن سے ڈراؤ جب کہ دل غم سے بھر کر گلوں تک آرہے ہوں گے۔ (اور) ظالموں کا کوئی دوست نہ ہوگا اور نہ کوئی سفارشی جس کی بات قبول کی جائے{
    Lekin jin kay dil Haq se murr jayein woh kabhi bhi unse inkar ya jhootla nahin sakte jo keh sahih aur wazeh Aayat hain ; Agarche woh unse murr jayein jaisa keh woh inke baare mein nahin jante aur mujhse behas krte rahein Aayat Mustashabihat ko le kar aur Shafaa kay liye mesaal kay toar par Allah SWT ka kalam jo sab se bada ha :
    {مَن ذَا الَّذِي يَشْفَعُ عِندَهُ إِلَّا بِإِذْنِهِ} [البقرة:255]
    }جو اس کی اجازت کے بغیر اس سے (کسی کی) سفارش کر سکے{
    {مَا مِن شَفِيعٍ إِلَّا مِن بَعْدِ إِذْنِهِ} [يونس:3].
    }کوئی (اس کے پاس) اس کا اذن حاصل کیے بغیر کسی کی سفارش نہیں کرسکتا{
    {وَقَالُوا اتَّخَذَ الرَّحْمَـٰنُ وَلَدًا سُبْحَانَهُ بَلْ عِبَادٌ مُّكْرَمُونَ ﴿٢٦﴾ لَا يَسْبِقُونَهُ بِالْقَوْلِ وَهُم بِأَمْرِهِ يَعْمَلُونَ ﴿٢٧﴾يَعْلَمُ مَا بَيْنَ أَيْدِيهِمْ وَمَا خَلْفَهُمْ وَلَا يَشْفَعُونَ إِلَّا لِمَنِ ارْتَضَىٰ وَهُم مِّنْ خَشْيَتِهِ مُشْفِقُونَ ﴿٢٨﴾}
    [الأنبياء].
    }اور کہتے ہیں کہ خدا بیٹا رکھتا ہے۔ وہ پاک ہے (اس کے نہ بیٹا ہے نہ بیٹی) بلکہ (جن کو یہ لوگ اس کے بیٹے بیٹیاں سمجھتے ہیں) وہ اس کے عزت والے بندے ہیں ﴿۲۶﴾ اس کے آگے بڑھ کر بول نہیں سکتے۔ اور اس کے حکم پر عمل کرتے ہیں ﴿۲۷﴾ جو کچھ ان کے آگے ہوچکا ہے اور پیچھے ہوگا وہ سب سے واقف ہے اور وہ (اس کے پاس کسی کی) سفارش نہیں کرسکتے مگر اس شخص کی جس سے خدا خوش ہو اور وہ اس کی ہیبت سے ڈرتے رہتے ہیں ﴿۲۸﴾{
    Allah SWT farmate hain :
    {وَيَسْأَلُونَكَ عَنِ الْجِبَالِ فَقُلْ يَنسِفُهَا رَبِّي نَسْفًا ﴿١٠٥﴾ فَيَذَرُهَا قَاعًا صَفْصَفًا ﴿١٠٦﴾ لَّا تَرَىٰ فِيهَا عِوَجًا وَلَا أَمْتًا ﴿١٠٧﴾ يَوْمَئِذٍ يَتَّبِعُونَ الدَّاعِيَ لَا عِوَجَ لَهُ وَخَشَعَتِ الْأَصْوَاتُ لِلرَّحْمَـٰنِ فَلَا تَسْمَعُ إِلَّا هَمْسًا ﴿١٠٨﴾ يَوْمَئِذٍ لَّا تَنفَعُ الشَّفَاعَةُ إِلَّا مَنْ أَذِنَ لَهُ الرَّحْمَـٰنُ وَرَضِيَ لَهُ قَوْلًا ﴿١٠٩﴾} صدق الله العظيم [طه].
    } اور تم سے پہاڑوں کے بارے میں دریافت کرتے ہیں۔ کہہ دو کہ خدا ان کو اُڑا کر بکھیر دے گا ﴿۱۰۵﴾ اور زمین کو ہموار میدان کر چھوڑے گا ﴿۱۰۶﴾ جس میں نہ تم کجی (اور پستی) دیکھو گے نہ ٹیلا (اور بلندی) ﴿۱۰۷﴾ اس روز لوگ ایک پکارنے والے کے پیچھے چلیں گے اور اس کی پیروی سے انحراف نہ کرسکیں گے اور خدا کے سامنے آوازیں پست ہوجائیں گی تو تم آواز خفی کے سوا کوئی آواز نہ سنو گے ﴿۱۰۸﴾ اس روز (کسی کی) سفارش کچھ فائدہ نہ دے گی مگر اس شخص کی جسے خدا اجازت دے اور اس کی بات کو پسند فرمائے ﴿۱۰۹﴾{
    Allah SWT farmate hain :
    {وَلَا يَمْلِكُ الَّذِينَ يَدْعُونَ مِن دُونِهِ الشَّفَاعَةَ إِلَّا مَن شَهِدَ بِالْحَقِّ وَهُمْ يَعْلَمُونَ} صدق الله العظيم [الزخرف:86].
    }اور جن کو یہ لوگ خدا کے سوا پکارتے ہیں وہ سفارش کا کچھ اختیار نہیں رکھتے۔ ہاں جو علم ویقین کے ساتھ حق کی گواہی دیں (وہ سفارش کرسکتے ہیں){
    Allah SWT farmate hain :
    {وَكَم مِّن مَّلَكٍ فِي السَّمَاوَاتِ لَا تُغْنِي شَفَاعَتُهُمْ شَيْئًا إِلَّا مِن بَعْدِ أَن يَأْذَنَ اللَّهُ لِمَن يَشَاءُ وَيَرْضَىٰ} صدق الله العظيم [النجم:26].
    } اور آسمانوں میں بہت سے فرشتے ہیں جن کی سفارش کچھ بھی فائدہ نہیں دیتی مگر اس وقت کہ خدا جس کے لئے چاہے اجازت بخشے اور (سفارش) پسند کرے{
    Ae Muslim Ulmaa aur unki Ummat, Hum Aayat Mutashabihat mein Shafaa kay raaz ki tafseer ko nazar andaaz kar rahe hain taakeh haq apke fitnah ko aur bada fitnah na bana de kyun ki kuch aise loag hain jin ko haq makrooh se bada makrooh bana deta ha ! aur lekin mein ap ki tableegh kar raha hoon iss umeed se keh ap yeh samjhein iss istissnah se Allah SWT kay Qoal se jo sab bada ha :
    {إِلَّا مِن بَعْدِ أَن يَأْذَنَ اللَّهُ لِمَن يَشَاءُ وَيَرْضَىٰ{
    {مگر اس وقت کہ خدا جس کے لئے چاہے اجازت بخشے اور (سفارش) پسند کرے{
    Allah SWT kay Qoal ki taraf dekhiye :
    {وَيَرْضَىٰ} صدق الله العظيم.
    Iss liye Shafaa aise nahin jaise ap Daawa kar rahe hain, bulke Allah kay khadimoan mein se aik aisa khadim hai jisse Allah SWT ne ijazat di ha keh woh apne rab se baat kare iss moazu pe (jo keh Shafaa ha) jo keh motaqeen mein se ha, aur woh Allah SWT se yeh nahin kahein ga keh kisi k liye Shafaa karein SWT bohat zyada bada ha ! bulke woh Allah SWT se kahein ga keh unhein Jannat un Naeem nahin chaie aur uss se bhi badi kamyabi Naeem Ul Akbar (Allah SWT ko andar se mutmaien krna) chaie, lekin Allah SWT uss waqt tak mutmaeen nahin honga jab tak k woh apne tamam khadimoan ko apne rehmat k saaye mein na le lein. Aur iss liye Allah SWT jo sab se bade hain farmate hain :
    {وَكَم مِّن مَّلَكٍ فِي السَّمَاوَاتِ لَا تُغْنِي شَفَاعَتُهُمْ شَيْئًا إِلَّا مِن بَعْدِ أَن يَأْذَنَ اللَّهُ لِمَن يَشَاءُ وَيَرْضَىٰ} صدق الله العظيم [النجم:26]

    Issi liye shafaa ki kamyabi yehi ha k Allah SWT ko andar se mutmaien krna , aur yeh kaise hoga Allah SWT ko andar se mutmaien krna ? jab woh apne tamam khadimoan ko apni rehmat saaye mein le lein ga aur phir Shafaa aaye gi Allah SWT ki taraf se jo akela ha aur uska koi shareek nahin,aur yahan sab se bada Taajub ha jahanami loagoan k liye , Mazeed tasdeeq krte huye Allah SWT kay kalam se jo sab se bada ha :
    {حَتَّىٰ إِذَا فُزِّعَ عَن قُلُوبِهِمْ قَالُوا مَاذَا قَالَ رَبُّكُمْ قَالُوا الْحَقَّ وَهُوَ الْعَلِيُّ الْكَبِيرُ} [سبأ:23].
    }یہاں تک کہ جب ان کے دلوں سے اضطراب دور کردیا جائے گا تو کہیں گے تمہارے پروردگار نے کیا فرمایا ہے{
    Aur Allah SWT farmate hain :
    {وَلَا تَنفَعُ الشَّفَاعَةُ عِندَهُ إِلَّا لِمَنْ أَذِنَ لَهُ حَتَّىٰ إِذَا فُزِّعَ عَن قُلُوبِهِمْ قَالُوا مَاذَا قَالَ رَبُّكُمْ قَالُوا الْحَقَّ وَهُوَ الْعَلِيُّ الْكَبِيرُ}[سبأ:23]
    {اور خدا کے ہاں (کسی کے لئے) سفارش فائدہ نہ دے گی مگر اس کے لئے جس کے بارے میں وہ اجازت بخشے۔ یہاں تک کہ جب ان کے دلوں سے اضطراب دور کردیا جائے گا تو کہیں گے تمہارے پروردگار نے کیا فرمایا ہے{
    Jaisa keh Allah SWT apne kalam se farmate hain jo sab se bada ha :
    {وَلَا تَنفَعُ الشَّفَاعَةُ عِندَهُ إِلَّا لِمَنْ أَذِنَ لَهُ} صدق الله العظيم}[سبأ,
    Allah SWT ne inhein yeh ijazat nahin di keh woh unke khadimoan ko Shafaa dein; bulke Allah SWT ne unhein ijazat di iss kaam mein keh woh unse sahih baat karein ga kyun ki Allah SWT bohat reham krne walah apne bandoan par aur un par jo uss se Shafaa mangte hain, Tou woh kaise apne rab k hath k ilawa unhein Shafaa de sakta ha ? Aur issi liye Allah SWT ne unhein ijazat di jo keh mutaqeen mein se hain kyun ki woh hamesha sahih baat karein ga aur kabhi bhi apne rab k ilawa kisi ko Shafaa dene ki jurrat nahin karein ga woh Allah jis k liye sab tareefein hain aur woh sab se bada ha, aur issi liye ap yeh kabhi nahin dekhein ga k tamam muatqeen mein chahe woh Jin ho ya Insaan ho ya Allah SWT rehman k qreebi Farsihtoan mein se hoan, ap yeh kabhi nahin dekhein ga keh woh Allah SWT se iss masa'le par Khitab karein kyun ki yeh sab Allah Al Atham ka yeh naam nahin jante jo Allah SWT ne jisko raaz rakha ha, Aur issi liye Allah SWT farmate hain jo sab se bada ha :

    {إِنَّ لِلْمُتَّقِينَ مَفَازًا ﴿٣١﴾ حَدَائِقَ وَأَعْنَابًا ﴿٣٢﴾ وَكَوَاعِبَ أَتْرَابًا ﴿٣٣﴾ وَكَأْسًا دِهَاقًا ﴿٣٤﴾ لَّا يَسْمَعُونَ فِيهَا لَغْوًا وَلَا كِذَّابًا ﴿٣٥﴾ جَزَاءً مِّن رَّبِّكَ عَطَاءً حِسَابًا ﴿٣٦﴾ رَّبِّ السَّمَاوَاتِ وَالْأَرْضِ وَمَا بَيْنَهُمَا الرَّحْمَٰنِ لَا يَمْلِكُونَ مِنْهُ خِطَابًا} صدق الله العظيم [النبأ
    }بے شک پرہیز گاروں کے لیے کامیابی ہے ﴿۳۱﴾ (یعنی) باغ اور انگور ﴿۳۲﴾ اور ہم عمر نوجوان عورتیں ﴿۳۳﴾ اور شراب کے چھلکتے ہوئے گلاس ﴿۳۴﴾ وہاں نہ بیہودہ بات سنیں گے نہ جھوٹ (خرافات) ﴿۳۵﴾ یہ تمہارے پروردگار کی طرف سے صلہ ہے انعام کثیر ﴿۳۶﴾ وہ جو آسمانوں اور زمین اور جو ان دونوں میں ہے سب کا مالک ہے بڑا مہربان کسی کو اس سے بات کرنے کا یارا نہیں ہوگا{
    Ae Allah kay Ibadat guzaar bando zara Allah ki wazeh kitab (Qur'an) ki taraf dekhiye jo keh yeh fatwa de rahi ha sab mutaqeen mein se Insaan ya Jino'an mein se kisi ko yeh ijazat nahin keh woh Allah SWT Rehman se Shafaa k masaale par Khitab kare, Aur yahan tak Jabriel AS aur tamam Farishtoan ko bhi yeh ijazat nahin jo keh Rehman Allah SWT kay Qareeboan mein se hain. Allah SWT k qoal se tasdeeq krte hain :
    {يَوْمَ يَقُومُ الرُّوحُ وَالْمَلَائِكَةُ صَفًّا لَّا يَتَكَلَّمُونَ}
    }جس دن روح (الامین) اور فرشتے صف باندھ کر کھڑے ہوں گے{
    Phir Allah SWT ne apne khadimoan mein se aik khadim ka intekhaab kiya


    Aur iss liye woh akele aik aise haq par mubni hain jo Allah SWT se iss Masa'ale par baat kar sakte hain aur Allah SWT yeh jante hain k unka yeh banda unse sirf sahi baat par behass kare ga aur kabhi uss mein madakhlat nahin kare ga, Aur aisa hona bhi nahin chaie k woh apne Rab aur uske ibadat guzaar bandoan k darmyan madkhlat kare Tamam taareefein uss rab k liye aur woh sab se bada ha, Bulke woh apne Rab se mukhatib hoga sab se badi kamyabi k liye jo keh Naeem Al Aatham ha aur Naeem Al Jannah se barh kar ha Apne rab ko raazi krne k liye ((((( Aur Raazi kare))))),
    Issi liye Shafaa yeh ha keh Allah SWT ko mutmain aur raazi kiya jaye, Aur issi liye unka khadim unse Mukhatib hoga kamyabi k liye jo Naeem Ul Aatham ha aur Jannat Un Naeem se bhi bharr kar hai ((((((((Raazi)))))))))

    Aur issi liye Allah SWT farmate hain :
    {وَكَم مِّن مَّلَكٍ فِي السَّمَاوَاتِ لَا تُغْنِي شَفَاعَتُهُمْ شَيْئًا إِلَّا مِن بَعْدِ أَن يَأْذَنَ اللَّهُ لِمَن يَشَاءُ وَيَرْضَىٰ} صدق الله العظيم [النجم:26
    } اور آسمانوں میں بہت سے فرشتے ہیں جن کی سفارش کچھ بھی فائدہ نہیں دیتی مگر اس وقت کہ خدا جس کے لئے چاہے اجازت بخشے اور (سفارش) پسند کرے{
    Aur Allah SWT kaise mutmain aur raazi honga ? jab tak keh woh apne bandoan pe se azaab hata kar unhein jannat mein dakhil na kar dein, Allah SWT farmate hain :
    {وَكَم مِّن مَّلَكٍ فِي السَّمَاوَاتِ لَا تُغْنِي شَفَاعَتُهُمْ شَيْئًا إِلَّا مِن بَعْدِ أَن يَأْذَنَ اللَّهُ لِمَن يَشَاءُ وَيَرْضَىٰ} صدق الله العظيم [النجم:26].
    } اور آسمانوں میں بہت سے فرشتے ہیں جن کی سفارش کچھ بھی فائدہ نہیں دیتی مگر اس وقت کہ خدا جس کے لئے چاہے اجازت بخشے اور (سفارش) پسند کرے{
    Issi liye Shafaa Allah SWT k liye ha jo akela ha aur uska koi Shareek nahin aur usko tab tak nahin hasil kiya ja sakta jab tak woh (Allah SWT) raazi na hojayein , tou agar woh raazi hojayein phir unki rehmat haasil hogi aur unhein Allah SWT ki rehmat se Shafaa mile gi na keh Ghussa, Allah SWT k Qoal ki tasdeeq krte huye jo sab se bada ha :
    {قُل لِّلَّـهِ الشَّفَاعَةُ جَمِيعًا لَّهُ مُلْكُ السَّمَاوَاتِ وَالْأَرْضِ ثُمَّ إِلَيْهِ تُرْجَعُونَ﴿٤٤﴾ وَإِذَا ذُكِرَ اللَّـهُ وَحْدَهُ اشْمَأَزَّتْ قُلُوبُ الَّذِينَ لَا يُؤْمِنُونَ بِالْآخِرَةِ وَإِذَا ذُكِرَ الَّذِينَ مِن دُونِهِ إِذَا هُمْ يَسْتَبْشِرُونَ ﴿٤٥﴾ قُلِ اللَّـهُمَّ فَاطِرَ السَّمَاوَاتِ وَالْأَرْضِ عَالِمَ الْغَيْبِ وَالشَّهَادَةِ أَنتَ تَحْكُمُ بَيْنَ عِبَادِكَ فِي مَا كَانُوا فِيهِ يَخْتَلِفُونَ ﴿٤٦﴾} صدق الله العظيم [الزمر
    }کہہ دو کہ سفارش تو سب خدا ہی کے اختیار میں ہے۔ اسی کے لئے آسمانوں اور زمین کی بادشاہت ہے۔ پھر تم اسی کی طرف لوٹ کر جاؤ گے ﴿۴۴﴾ اور جب تنہا خدا کا ذکر کیا جاتا ہے تو جو لوگ آخرت پر ایمان نہیں رکھتے ان کے دل منقبض ہوجاتے ہیں۔ اور جب اس کے سوا اوروں کا ذکر کیا جاتا ہے تو خوش ہوجاتے ہیں ﴿۴۵﴾ کہو کہ اے خدا (اے) آسمانوں اور زمین کے پیدا کرنے والے (اور) پوشیدہ اور ظاہر کے جاننے والے تو ہی اپنے بندوں میں ان باتوں کا جن میں وہ اختلاف کرتے رہے ہیں فیصلہ کرے گا ﴿۴۶﴾{
    So woh kaun ha jo tumhein sab se zyada rehmatein de Allah SWT k ilawa jo sab se bada remhatoan wala ha tamam rehmatoan walo mein se ?
    Ae Qoam kya tum yeh nahin jante k woh (Allah SWT) Gham Zadah hain apne kahdimoan se jinhon ne apne sath Zulm kiya jubke Allah SWT ne unke sath koi Zulm nahin kiya ? Aur hum phir bhi apko Yaad Dahani karwate hain Allah SWT ke Gham ki unke kahdimoan par, Allah SWT sab se bade hain aur farmate hain :
    يَا حَسْرَةً عَلَى الْعِبَادِ} [يس:30].
    بندوں پر افسوس ہے
    Jaise keh jo apne ap Zulm krte hain woh sab yeh kahein ga :
    {يَا حَسْرَتَىٰ عَلَىٰ مَا فَرَّطتُ فِي جَنبِ اللَّـهِ وَإِن كُنتُ لَمِنَ السَّاخِرِينَ ﴿٥٦﴾} صدق الله العظيم [الزمر]
    کہ (مبادا اس وقت) کوئی متنفس کہنے لگے کہ (ہائے ہائے) اس تقصیر پر افسوس ہے جو میں نے خدا کے حق میں کی اور میں تو ہنسی ہی کرتا رہا ﴿۵۶﴾
    Kya Afsoos aur ghazab aik sath waqea hoskate hain ? Iska matlab ha aisa mumkin ha k Allah SWT loagoan par gussa hoan aur ussi Dauran un pe afsoos zadah hoan ? Jawab yeh ha k Nahin yaqeenan Allah SWT ko afsoos hoga jab unke khadimoan ko khud afsoos hoga aur kahein ga hum khud par Zulm karte rahe :
    {يَا حَسْرَتَىٰ عَلَىٰ مَا فَرَّطتُ فِي جَنبِ اللَّـهِ وَإِن كُنتُ لَمِنَ السَّاخِرِينَ ﴿٥٦﴾} صدق الله العظيم [الزمر]
    کہ (مبادا اس وقت) کوئی متنفس کہنے لگے کہ (ہائے ہائے) اس تقصیر پر افسوس ہے جو میں نے خدا کے حق میں کی اور میں تو ہنسی ہی کرتا رہا ﴿۵۶﴾
    Aur Allah SWT ko afsoos tab hota ha jab woh apne Anbiya AS ki Dua'a sun kar jiska unse Allah SWT ne WAADA kiya ha unki Qoam ko sakht halaq karta deta ha, lekin aisa krna apne bandoan par unke liye asaan nahin ha aur woh un par koi cheez ghalat nahin kar rahe bulke unke bande khud par apne pe zulm krte hain aur yeh iss wajah se ha k yeh unki Sefat ha k woh phir bhi reham krte hain, aur yeh reham waisa nahin ha jaisa keh aik maa apne na farman bete k liye ho aur agar woh usko Aag mein cheekhta dekhe aur afsoos kare bulke unka dukh aur afsoos apne bande ko uss Maa se bhi bharh keh hain k woh jante hain k unke bandoan ne apne aap par Zulm kiya aur phir bhi woh unke liye afsoos reakhte hain , aur yehi wajah ha k Allah SWT sab se bade reham krne wala ha, so apne bandoan ko tabah krne keh baad jinhoan ne Allah SWT keh paghaimbroan ko Jhutlaya aur Allah SWT se maghfirat ka inkar kiya unke liye, Allah SWT farmate hain jo sab se bade hain :
    {وَقَالُوا إِنَّا كَفَرْنَا بِمَا أُرْسِلْتُم بِهِ وَإِنَّا لَفِي شَكٍّ مِّمَّا تَدْعُونَنَا إِلَيْهِ مُرِيبٍ ﴿٩﴾ قَالَتْ رُسُلُهُمْ أَفِي اللَّهِ شَكٌّ فَاطِرِ السَّمَاوَاتِ وَالْأَرْضِ يَدْعُوكُمْ لِيَغْفِرَ لَكُم مِّن ذُنُوبِكُمْ} صدق الله العظيم [إبراهيم:9-10].
    }بھلا تم کو ان لوگوں (کے حالات) کی خبر نہیں پہنچی جو تم سے پہلے تھے (یعنی) نوح اور عاد اور ثمود کی قوم۔ اور جو ان کے بعد تھے۔ جن کا علم خدا کے سوا کسی کو نہیں (جب) ان کے پاس پیغمبر نشانیاں لے کر آئے تو انہوں نے اپنے ہاتھ ان کے مونہوں پر رکھ دیئے (کہ خاموش رہو) اور کہنے لگے کہ ہم تو تمہاری رسالت کو تسلیم نہیں کرتے اور جس چیز کی طرف تم ہمیں بلاتے ہو ہم اس سے قوی شک میں ہیں ﴿۹﴾ ان کے پیغمبروں نے کہا کیا (تم کو) خدا (کے بارے) میں شک ہے جو آسمانوں اور زمین کا پیدا کرنے والا ہے۔ وہ تمہیں اس لیے بلاتا ہے کہ تمہارے گناہ بخشے اور (فائدہ پہنچانے کے لیے) ایک مدت مقرر تک تم کو مہلت دے۔ وہ بولے کہ تم تو ہمارے ہی جیسے آدمی ہو۔ تمہارا یہ منشاء ہے کہ جن چیزوں کو ہمارے بڑے پوجتے رہے ہیں ان (کے پوجنے) سے ہم کو بند کر دو تو (اچھا) کوئی کھلی دلیل لاؤ (یعنی معجزہ دکھاؤ) ﴿۱۰﴾{
    Jab tak keh paghaimbar yeh yaqeen kar lein unki qoam ne unko jhutlaya aur seedhe raaste pe naa aaye wahan unhone ne unse dast bardar ho kar yeh kaha :
    {رَبَّنَا افْتَحْ بَيْنَنَا وَبَيْنَ قَوْمِنَا بِالْحَقِّ وَأَنتَ خَيْرُ الْفَاتِحِينَ} صدق الله العظيم [الأعراف:89].
    }اگر ہم اس کے بعد کہ خدا ہمیں اس سے نجات بخش چکا ہے تمہارے مذہب میں لوٹ جائیں تو بےشک ہم نے خدا پر جھوٹ افتراء باندھا۔ اور ہمیں شایاں نہیں کہ ہم اس میں لوٹ جائیں ہاں خدا جو ہمارا پروردگار ہے وہ چاہے تو (ہم مجبور ہیں) ۔ ہمارے پروردگار کا علم ہر چیز پر احاطہ کیے ہوئے ہے۔ ہمارا خدا ہی پر بھروسہ ہے۔ اے پروردگار ہم میں اور ہماری قوم میں انصاف کے ساتھ فیصلہ کردے اور تو سب سے بہتر فیصلہ کرنے والا ہے{
    Phir Allah SWT ki di gayi jeet unhein mili aur Allah SWT apne Rasooloan aur Auliyaa
    se kiya hua Waada kabhi adhoora nahin chorta aur unki madad krta ha unke Dushmano par ghalib aane par unki madad krta ha, aur phir unke baad unko uss sar zameen ka waris banata ha, aur Allah SWT sab se bade hain farmate hain :
    {وَكَأَيِّن مِّنْ آيَةٍ فِي السَّمَاوَاتِ وَالْأَرْضِ يَمُرُّونَ عَلَيْهَا وَهُمْ عَنْهَا مُعْرِضُونَ ﴿١٠٥﴾ وَمَا يُؤْمِنُ أَكْثَرُهُم بِاللَّـهِ إِلَّا وَهُم مُّشْرِكُونَ﴿١٠٦﴾ أَفَأَمِنُوا أَن تَأْتِيَهُمْ غَاشِيَةٌ مِّنْ عَذَابِ اللَّـهِ أَوْ تَأْتِيَهُمُ السَّاعَةُ بَغْتَةً وَهُمْ لَا يَشْعُرُونَ ﴿١٠٧﴾ قُلْ هَـٰذِهِ سَبِيلِي أَدْعُو إِلَى اللَّـهِ عَلَىٰ بَصِيرَةٍ أَنَا وَمَنِ اتَّبَعَنِي ۖ وَسُبْحَانَ اللَّـهِ وَمَا أَنَا مِنَ الْمُشْرِكِينَ﴿١٠٨﴾ وَمَا أَرْسَلْنَا مِن قَبْلِكَ إِلَّا رِجَالًا نُّوحِي إِلَيْهِم مِّنْ أَهْلِ الْقُرَىٰ أَفَلَمْ يَسِيرُوا فِي الْأَرْضِ فَيَنظُرُوا كَيْفَ كَانَ عَاقِبَةُ الَّذِينَ مِن قَبْلِهِمْ وَلَدَارُ الْآخِرَةِ خَيْرٌ لِّلَّذِينَ اتَّقَوْا أَفَلَا تَعْقِلُونَ﴿١٠٩﴾ حَتَّىٰ إِذَا اسْتَيْأَسَ الرُّسُلُ وَظَنُّوا أَنَّهُمْ قَدْ كُذِبُوا جَاءَهُمْ نَصْرُنَا فَنُجِّيَ مَن نَّشَاءُ وَلَا يُرَدُّ بَأْسُنَا عَنِ الْقَوْمِ الْمُجْرِمِينَ﴿١١٠﴾ لَقَدْ كَانَ فِي قَصَصِهِمْ عِبْرَةٌ لِّأُولِي الْأَلْبَابِ مَا كَانَ حَدِيثًا يُفْتَرَىٰ وَلَـٰكِن تَصْدِيقَ الَّذِي بَيْنَ يَدَيْهِ وَتَفْصِيلَ كُلِّ شَيْءٍ وَهُدًى وَرَحْمَةً لِّقَوْمٍ يُؤْمِنُونَ ﴿١١١﴾} صدق الله العظيم [يوسف].
    اور آسمان و زمین میں بہت سی نشانیاں ہیں جن پر یہ گزرتے ہیں اور ان سے اعراض کرتے ہیں ﴿۱۰۵﴾ اور یہ اکثر خدا پر ایمان نہیں رکھتے۔ مگر (اس کے ساتھ) شرک کرتے ہیں ﴿۱۰۶﴾ کیا یہ اس (بات) سے بےخوف ہیں کہ ان پر خدا کا عذاب نازل ہو کر ان کو ڈھانپ لے یا ان پر ناگہاں قیامت آجائے اور انہیں خبر بھی نہ ہو ﴿۱۰۷﴾ کہہ دو میرا رستہ تو یہ ہے میں خدا کی طرف بلاتا ہوں (از روئے یقین وبرہان) سمجھ بوجھ کر میں بھی (لوگوں کو خدا کی طرف بلاتا ہوں) اور میرے پیرو بھی۔ اور خدا پاک ہے۔ اور میں شرک کرنے والوں میں سے نہیں ہوں ﴿۱۰۸﴾ اور ہم نے تم سے پہلے بستیوں کے رہنے والوں میں سے مرد ہی بھیجے تھے جن کی طرف ہم وحی بھیجتے تھے۔ کیا ان لوگوں نے ملک میں سیر (وسیاحت) نہیں کی کہ دیکھ لیتے کہ جو لوگ ان سے پہلے تھے ان کا انجام کیا ہوا۔ اور متّقیوں کے لیے آخرت کا گھر بہت اچھا ہے۔ کیا تم سمجھتے نہیں؟ ﴿۱۰۹﴾ یہاں تک کہ جب پیغمبر ناامید ہوگئے اور انہوں نے خیال کیا کہ اپنی نصرت کے بارے میں جو بات انہوں نے کہی تھی (اس میں) وہ سچے نہ نکلے تو ان کے پاس ہماری مدد آ پہنچی۔ پھر جسے ہم نے چاہا بچا دیا۔ اور ہمارا عذاب (اتر کر) گنہگار لوگوں سے پھرا نہیں کرتا ﴿۱۱۰﴾ ان کے قصے میں عقلمندوں کے لیے عبرت ہے۔ یہ (قرآن) ایسی بات نہیں ہے جو (اپنے دل سے) بنائی گئی ہو بلکہ جو (کتابیں) اس سے پہلے نازل ہوئی ہیں ان کی تصدیق (کرنے والا) ہے اور مومنوں کے لیے ہدایت اور رحمت ہے ﴿۱۱۱﴾
    Allah SWT farmate hain jo sab se bade hain :
    {وَلَا يَظْلِمُ رَبُّكَ أَحَدًا} [الكهف:49].
    اور تمہارا پروردگار کسی پر ظلم نہیں کرے گا ﴿۴۹﴾
    {وَمَا ظَلَمُونَا وَلَٰكِن كَانُوا أَنفُسَهُمْ يَظْلِمُونَ} صدق الله العظيم [البقرة:57].
    (اور) وہ ہمارا کچھ نہیں بگاڑتے تھے بلکہ اپنا ہی نقصان کرتے تھے ﴿۵۷﴾
    Lekin ae Allah SWT kay Mehboob logo Ae Muashare kay Maa Aur Baap, Zara soachiye apki aulaad mein se aik bacha saari zindagi apki nafarmani karta raha ho aur kisi bhi mamlay mein usne apki baat na mani ho, aur uski moat k baad apko yeh maloom ho keh woh jahanam ki aag mein cheekh raha ha aur azaab se guzar raha ha , soachiye keh apko kitna afsoos aur dukh hoga apne bache kay liye ! tou apke khayal mein apne rab keh dukh aur afsoos kya hoga jo sab se bada rehman ha ? aur Allah SWT tamam rahimo mein se sab se bada reham krne wala ha ! kya apne Allah SWT ki kitab mein yeh nahin paya k woh kis tarah apne bandoan se gham aur afsoos zadah hain, Aur Allah SWT jo sab se bade hain farmate hain :
    {إِن كَانَتْ إِلَّا صَيْحَةً وَاحِدَةً فَإِذَا هُمْ خَامِدُونَ﴿٢٩﴾ يَا حَسْرَةً عَلَى الْعِبَادِ مَا يَأْتِيهِم مِّن رَّسُولٍ إِلَّا كَانُوا بِهِ يَسْتَهْزِئُونَ ﴿٣٠﴾} صدق الله العظيم [يس].
    وہ تو صرف ایک چنگھاڑ تھی (آتشین) سو وہ (اس سے) ناگہاں بجھ کر رہ گئے ﴿۲۹﴾ بندوں پر افسوس ہے کہ ان کے پاس کوئی پیغمبر نہیں آتا مگر اس سے تمسخر کرتے ہیں ﴿۳۰﴾
    Jaisa keh woh apne ooper Zulm Dhaate rahe un mein se har aik yeh kahe ga :
    {يَا حَسْرَتَىٰ عَلَىٰ مَا فَرَّطتُ فِي جَنبِ اللَّـهِ وَإِن كُنتُ لَمِنَ السَّاخِرِينَ ﴿٥٦﴾} صدق الله العظيم [الزمر].
    (ہائے ہائے) اس تقصیر پر افسوس ہے جو میں نے خدا کے حق میں کی اور میں تو ہنسی ہی کرتا رہا ﴿۵۶﴾
    Aur Doosroan kay liye :
    {فَرِحِينَ بِمَا آتَاهُمُ اللَّهُ مِن فَضْلِهِ} صدق الله العظيم [آل عمران:170].
    جو کچھ خدا نے ان کو اپنے فضل سے بخش رکھا ہے
    Aur aise loagoan kay liye Allah SWT farmate hain :
    {يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا مَن يَرْتَدَّ مِنكُمْ عَن دِينِهِ فَسَوْفَ يَأْتِي اللَّهُ بِقَوْمٍ يُحِبُّهُمْ وَيُحِبُّونَهُ} صدق الله العظيم [المائدة:54].
    {اے ایمان والو اگر کوئی تم میں سے اپنے دین سے پھر جائے گا تو خدا ایسے لوگ پیدا کر دے گا جن کو وہ دوست رکھے اور جسے وہ دوست رکھیں{
    woh kaise Jannat al Naiem mein khush rahein ga jab keh unke Imam ne unhein bataya ha jise woh mohabbat rakhte hain woh andar se unse gham aur afsoos zadah hain apne bandoan se jo apne sath Zulm karte hain ? aur issi liye woh sab se badi kamyabi hasil krna chahte hain jo keh Naiem Al Aatham ha jo keh Jannat al Naiem se bhi behtar ha, aur Allah SWT k tamam Salaheen apne rab se mohabbat rakhte hain kyun ki Allah SWT ne unke sath hamesha acha kiya aur unhein jahanam se nikal kar jannat mein dakhil kiya, lekin woh loag jinse Allah SWT ne Waada kiya apni muhkim kitab mein k unki mohabbat unke rab se dekhawe se kahin bharr keh ha issi liye ap yeh nahin dekhein ga k un par Allah SWT na Jahanm ki aag aur na hi jannat bayan ki, bulke Allah SWT farmate hain :
    {يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا مَن يَرْتَدَّ مِنكُمْ عَن دِينِهِ فَسَوْفَ يَأْتِي اللَّهُ بِقَوْمٍ يُحِبُّهُمْ وَيُحِبُّونَهُ أَذِلَّةٍ عَلَى الْمُؤْمِنِينَ أَعِزَّةٍ عَلَى الْكَافِرِينَ يُجَاهِدُونَ فِي سَبِيلِ اللَّهِ وَلَا يَخَافُونَ لَوْمَةَ لَائِمٍ ذَٰلِكَ فَضْلُ اللَّهِ يُؤْتِيهِ مَن يَشَاءُ وَاللَّهُ وَاسِعٌ عَلِيمٌ} صدق الله العظيم [المائدة:54].
    اے ایمان والو اگر کوئی تم میں سے اپنے دین سے پھر جائے گا تو خدا ایسے لوگ پیدا کر دے گا جن کو وہ دوست رکھے اور جسے وہ دوست رکھیں اور جو مومنوں کے حق میں نرمی کریں اور کافروں سے سختی سے پیش آئیں خدا کی راہ میں جہاد کریں اور کسی ملامت کرنے والی کی ملامت سے نہ ڈریں یہ خدا کا فضل ہے وہ جسے چاہتا ہے دیتا ہے اور الله بڑی کشائش والا اور جاننے والا ہے ﴿۵۴﴾
    Aur jo loag Aqal aur samajh rakhte hain yahan rukein ga aur soachein ga keh agar hum sach mein Allah SWT se mohabbat rakhte the jo keh Naeim Al Aatham ha jo keh jannat al naeim aur pak hoorein se bhi behtar ha, so aisi asayesh aur maze ka kya fayda jo hum jannat al naeim aur pak hoorein hain jab keh Imam Mahdi ne humein bataya keh humare mehboob gham aur afsoos zadah apne bandoan se jinhoan ne apne ooper zulm kiya ? unhein Allah SWT Jannat al Naeem aur Horoan se kabhi khush nahin karein ga bulke woh imam mahdi k sath milein ga aur koashish karein ga kamyabi hasil krne kay liye jo keh Naeem Al Aatham jab tak keh Allah SWT ka afsoos chala na jaye aur woh raazi na ho jayein apne bandoan se (((((((Aur Mutmaien ya Raazi))))))), bilkul yehi inki umeed inka maqsad aur khuwahish aur mukamal Maqasid hain kya ap jante hain kyun ? kyun ki yeh woh loag hain ((((((( jinse yeh mohabbat karein aur jo inse mohabbat kare ))))))), so inhi mein se aik na chahte huye Imam Mahdi ko apnaye ga aur apne rab ki jannat ko apne ooper haram kare ga aur kahe ga mein "mein apne ap ko kis tarah khush karun Jannat al naeem aur horoan se aur jannat k mahaloanse jab keh meri sab se mehboob cheez mujhe yeh keh rahi ha" (((((((Bandoan par Afsoos Ha)))))))
    Hum apko phir yaad dahani karwa rahe hain keh Allah SWT andar se ghamgeen aur afsoos zadah hain so unke bandoan se mat mango bulke apko tab tak sabar rakhna chaie keh jab tak woh unko Hedayat de dein, aur mera matlab sabar krna un bandoan par jo apni dunyawi Zindagi mein yeh samjhte hain keh unhein Hedyat mili huyi ha, aur yeh iss wajah se ha keh woh yeh nahin dekh sakte aur samjh sakte jaise keh ap loag dekh sakte ho Ae Ansaar, so sabar rakhiye Allah SWT unko hedayat de aur apni rehmat kare, Beshak Allah SWT har cheez par rehmat aur Ilm rakhta ha.
    Durood O Salam Mursaleen par, Aur Sab Taareefein Allah kay liye jo dono jahano ka maalik ha,
    Apka Bhai Imam Nasser Mohammed Al Yemani

    ______________



    [C
    OLOR="#000080"][/COLOR]

    http://www.mahdi-alumma.com/showthread.php?p=47796

  2. ترتيب المشاركة ورابطها: #2  Print  mPDF  PDF    رقم المشاركة لاعتمادها في الاقتباس: 279951   تعيين كل النص
    تاريخ التسجيل
    Apr 2017
    المشاركات
    214

    افتراضي

    اللهم لك الحمد والشكر كما تحبه وترضاه في نفسك على نعمة ترجمة البيان الحق لكتابك العظيم إلى اللغة الأوردية وجميع اللغات، وجازي اللهم احبابك المترجمين خير الجزاء، واهد اللهم به الضالين من عبادك والعن الشياطين من الجن والانس من كل جنس

المواضيع المتشابهه

  1. Imam Mahdi Muntazir Nasser Mohammed Al Yemani Ka Ta'aruf (Urdu Translation)
    بواسطة وقار علي في المنتدى اردو
    مشاركات: 4
    آخر مشاركة: 08-12-2017, 01:19 PM
  2. مشاركات: 0
    آخر مشاركة: 14-12-2016, 10:10 PM
  3. مشاركات: 0
    آخر مشاركة: 24-09-2016, 11:17 PM
  4. مشاركات: 0
    آخر مشاركة: 08-01-2016, 01:17 AM
  5. Ruling of the Imam Mahdi with Truth that the greetings is from Allah and for Allah, and you say it to one another..
    بواسطة راضيه بالنعيم الأعظم في المنتدى English
    مشاركات: 0
    آخر مشاركة: 18-12-2015, 03:24 PM

المفضلات

ضوابط المشاركة

  • لا تستطيع إضافة مواضيع جديدة
  • لا تستطيع الرد على المواضيع
  • لا تستطيع إرفاق ملفات
  • لا تستطيع تعديل مشاركاتك
  •